Ghadeer Shayari in Urdu and English Text

Ghadeer is a dedicated blog created for the lovers of Ahlebait (as), aimed at providing a rich collection of Shayari (poetry) to honor and celebrate the Wiladat (birthdays) of Masumeen (as). Recognizing the duty of Shia Muslims during the Ghaibat (occultation) of Imam Asr (atfs), this platform offers an accessible compilation of poems that express devotion to Ahlebait (as). Whether for personal reflection or communal recitation, Ghadeer ensures that momineen have a centralized resource for their poetic needs. As the verse from our community highlights, “Taqayya karna bhi chahu to mujh se ho nahi sakta, ke mujh ko chalte phirte Ya Ali (as) kehne ki aadat hai,” our blog embodies this spirit of open devotion and reverence.

Ghadeer Shayari in Urdu and English Text

Bada Azeem Bahut Behtareen Kaam Huwa – Janab Meer Anees

Bada Azeem Bahut Behtareen Kaam Huwa,
Khuda Ka Deen Ali (as) Murtuza Ke Naam Huwa.
Tha Sar Pe Shamsh, Garam Reyt, Dil Me Bugze Ali (as),
Kaha Kaha Se Jalane Ka Intezaam Huwa.

بڑا عظیم بہت بہترین کام ہوا،
خدا کا دین علی (ع) مرتضی کے نام ہوا۔
تھا سر پہ شمش، گرم ریت، دل میں بغض علی (ع)،
کہا کہا سے جلانے کا انتظام ہوا۔

Har Ek Chahane Wale Ko – Maulana Sharar Naqvi

Har Ek Chahane Wale Ko Hosh Bakshe Gi,
Maye Wilaye Ali (as) Hai Adab Se Pite Raho,
Kuch Iss Tarah Se Maanao Ghadeer ki Khushyan,
Husain (as) Karbobala Se Kahe Ke Jite Raho.

ہر ایک چاہنے والے کو ہوش بخشے گی،
مئے ولائے علی (ع) ہے ادب سے پیتے رہو،
کچھ اس طرح سے مناؤ غدیر کی خوشیاں،
حسین (ع) کربلا سے کہے کہ جیتے رہو۔

Misle Gulaab Tha Koi Chahera Ghadeer Me – Shaheed Mohsin Naqvi

Misle Gulaab Tha Koi Chahera Ghadeer Me,
Jalta Raha Kisi Ka kaleja Ghadeer Me,
Man Kunto Ki Sadaa Se Hataya Gaya Aqeel,
Meraaj Wali Raat Ka Pardah Ghadeer Me.

مثل گلاب تھا کوئی چہرا غدیر میں،
جلتا رہا کسی کا کلیجہ غدیر میں،
من کنتو کی صدا سے ہٹایا گیا عقیل،
معراج والی رات کا پردہ غدیر میں۔

Abhi Tak Jaan Ka Darr Tha – Janab Shaukat Raza Shaukat

Abhi Tak Jaan Ka Darr Tha Abhi To Aan Ka Darr Hai
Asheerah Par Jo Bola Tha Usi Farmaan Ka Darr Hai
Kisi Ne Ye Kisi Ke Kaan Me Chupke Se Kehdaala
Tujhe Palaan Ka Darr Tha Mujhe Eylaan Ka Darr Hai

ابھی تک جان کا ڈر تھا ابھی تو آن کا ڈر ہے
عشیرہ پر جو بولا تھا اسی فرمان کا ڈر ہے
کسی نے یہ کسی کے کان میں چپکے سے کہہ ڈالا
تجھے پالان کا ڈر تھا مجھے اعلان کا ڈر ہے

Yaume Ghadeer Aur Shabe Aashur Ka Tawaaf – Janab Mir Takallum

Yaume Ghadeer Aur Shabe Aashur Ka Tawaaf,
Iss Ke Siwah Hai Gardishe lailo Nahaar Kya.
Waez Ali (as) Ke Bughz Ki pathri Jigar Me Hai,
Andar Se Kar Raha Hai Khuda Sans’saar Kya.

یومِ غدیر اور شبِ عاشور کا طواف،
اس کے سوا ہے گردشِ لیلو نہار کیا۔
واعظ علی (ع) کے بغض کی پتھری جگر میں

Ya Ali (as) Kah Kar Jo Maine Ungliya Muh Me Rakhi – Betaab Hallauri

Ya Ali (as) Kah Kar Jo Maine Ungliya Muh Me Rakhi,
Wo Mazaa Dene Lagi Hum Ko Daseri Aam Ka,
Dushmane Haider (as) Ke Sar Ka Dard Jaa Sakta Nahi,
Kaar Khaana Wo Lagaa Le Chahe Zandu Balm Ka.

یا علیؑ کہہ کر جو میں نے انگلیاں منہ میں رکھی،
وہ مزا دینے لگی ہم کو دسہری آم کا،
دشمنِ حیدرؑ کے سر کا درد جا سکتا نہیں،
کار خانہ وہ لگا لے چاہے زانڈو بالم کا

Tum Ko To Hai Malum Wo Mazbut Hai Dhun Ka – Janab Shaukat Raza Shaukat

Tum Ko To Hai Malum Wo Mazbut Hai Dhun Ka
Iqrar Bhi Israar Bhi Ye Kaam Hai Punn Ka
Mat Ruthna Ahbab Nabi (s) Se Ya Ali (as) Se
Inn Ka Hai Ye Na Unka Hai Ye Hai Faisla Kunn Ka

تم کو تو ہے معلوم وہ مضبوط ہے دھن کا
اقرار بھی اصرار بھی یہ کام ہے پن کا
مت روٹھنا احباب نبیؐ سے یا علیؑ سے
ان کا ہے یہ نہ ان کا ہے یہ ہے فیصلہ کن کا

Ghadeer Kya Hai Batana Bahut Zaruri Hai

Ali (as) Ke Naam Ka Charcha Bahut Zaruri Hai
Ghadeer Kya Hai Batana Bahut Zaruri Hai
Jawan Hogaye Marhab Ke Nasl Ke Bachche
Imam e Asr (atfs) Ka Aana Bahut Zaruri Hai

علیؑ کے نام کا چرچا بہت ضروری ہے
غدیر کیا ہے بتانا بہت ضروری ہے
جوان ہو گئے مرحب کے نسل کے بچے
امام عصرؑ کا آنا بہت ضروری ہے

Har Ghadeer Wale Ka Bolna Zaroori Hai

Dushmanaane Haider (as) Ko Jo Qareeb Rakhte Hain
Mera Aisay Logon Se Faasla Zaroori Hai
Ahlebait (as) Ke Haq Ki Baat Jab Bhi Aaye Gi
Har Ghadeer Wale Ka Bolna Zaroori Hai

دشمنانِ حیدرؑ کو جو قریب رکھتے ہیں
میرا ایسے لوگوں سے فاصلہ ضروری ہے
اہلِ بیتؑ کے حق کی بات جب بھی آئے گی
ہر غدیر والے کا بولنا ضروری ہے

Sare Ali (as) Ke Taaj me Taraaj Kar Diye

Khum Pe Nabi (saw) Noor ke Ayse Hunar Diye,
Kitne Diye Hi Raushane Ismat Se Bhardiye,
Jitne Khilafato Ke Garondhe The Reth Me
Sare Ali (as) Ke Taaj me Taraaj Kar Diye.

خم پہ نبیؐ نور کے ایسے ہنر دیے،
کتنے دیے ہی روشنے عصمت سے بھر دیے،
جتنے خلافتوں کے گھروندے تھے ریت میں
سارے علیؑ کے تاج میں تراش کر دیے

Masjid Me Aake Dekh Le Shakq Tujhe Jo Ho

Masjid Me Aake Dekh Le Shakq Tujhe Jo Ho,
Wajib Me Ye Hosakta Nahi Maatmi Na Ho,
Hai Abbhi Waqt Kar Karle Wilaye Ali (as) Qabul,
Shayad Ye Teri Saans Kahi Akhri Na Ho.

مسجد میں آکے دیکھ لے شک تجھے جو ہو،
واجب میں یہ ہو سکتا نہیں ماتمی نہ ہو،
ہے ابھی وقت کر کر لے ولائے علی (ع) قبول،
شاید یہ تیری سانس کہیں آخری نہ ہو۔

Aaj Bhaagne Wale, Raasta Na Painge

Aaj Bhaagne Wale, Raasta Na Painge
Maimana Ghadeeri Hai, Maisara Ghadeeri Hai
Naam Leke Haider Ka, Ham Ye Jaan Lete Hain
Kon Hai Saqeefaaai Kon Sa Ghadeeri Hai

آج بھاگنے والے، راستہ نہ پائیں گے
میمنہ غدیری ہے، میسرہ غدیری ہے
نام لے کے حیدر کا، ہم یہ جان لیتے ہیں
کون ہے سقیفائی کون سا غدیری ہے

Wo Aaj Bhi Karte Hai Matam Ghadeer Ka

Karbobala Ka gham Tu Manaaye Ga Kis Tarah,
Tujh Ko Sataa Raha hai Abhi Gham Ghadeer Ka.
Jo Rokhte Rahe Hame Matam Se Umr Bhar,
Wo Aaj Bhi Karte Hai Matam Ghadeer Ka.

کرب و بلا کا غم تُو منائے گا کس طرح،
تجھ کو ستا رہا ہے ابھی غم غدیر کا۔
جو روکتے رہے ہمیں ماتم سے عمر بھر،
وہ آج بھی کرتے ہیں ماتم غدیر کا۔

Yaad e ghadeer aati hai mimber ko dekh kar

Jo nasal e yazeed (l.a) se rakhta hai rabta,
Jalta hai aaj roza e shabbeer (a.s) ko dekh kar,
Majlis mein aana is liye bid.dat bata diya,
Yaad e ghadeer aati hai mimber ko dekh kar…

جو نسل یزید (ل.ع) سے رکھتا ہے رابطہ،
جلتا ہے آج روضہ شبیر (ع) کو دیکھ کر،
مجلس میں آنا اس لئے بدعت بتا دیا،
یادِ غدیر آتی ہے منبر کو دیکھ کر…

Hum Apne Saath Chirage Ghadeer Rakhte Hai

Mataye Hubbe Janabe Ameer Rakhte Hai,
Ali Ke Ishq Ki Daulat fakir Rakhte Hai,
Majaal Kya Hai Andhere Mere Karib Aaye,
Hum Apne Saath Chirage Ghadeer Rakhte Hai.

متاع حبِ جنابِ امیر رکھتے ہیں،
علی کے عشق کی دولت فقیر رکھتے ہیں،
مجال کیا ہے اندھیرا میرے قریب آئے،
ہم اپنے ساتھ چراغِ غدیر رکھتے ہیں۔

Ghadeer e Khum Ke Moqaddar Ko Jagmagaae Hain

Anokhi Bazm Ye Sahra Me Kyun Sajaae Hain
Ghadeer e Khum Ke Moqaddar Ko Jagmagaae Hain
Isi Ko Noor Ala Noor Kahte Hain Zamin
Ali Ko Haathon Pe Apne Nabi Uthaae Hain

انوکھی بزم یہ صحرا میں کیوں سجائے ہیں
غدیر خم کے مقدر کو جگمگائے ہیں
اسی کو نور علی نور کہتے ہیں زمین
علی کو ہاتھوں پہ اپنے نبی اٹھائے ہیں

Humein mila hai mukammal Ghadeer se Islam

Jo ishq e Aal e Muhammad pe jaan dete hain,
Nabi unhi ki shafaat pe dhyaan dete hain,
Humein mila hai mukammal Ghadeer se Islam,
Hum hi wo hai jo mukammal azaan dete hain.

جو عشقِ آلِ محمد پر جان دیتے ہیں،
نبی انہی کی شفاعت پر دھیان دیتے ہیں،
ہمیں ملا ہے مکمل غدیر سے اسلام،
ہم ہی وہ ہیں جو مکمل اذان دیتے ہیں۔

Chadne Lage Ghadeer Ke Mimbar Pe Jab Ali a.s

Inkaar Jo Ali a.s Ki Wilayat Se Kar Gaya
Unka Naseeb Banne Se Pehle Bigad Gaya
Chadne Lage Ghadeer Ke Mimbar Pe Jab Ali a.s
Saare Haraamzado'n ka Chehra Utar Gaya

انکار جو علی علیہ السلام کی ولایت سے کر گیا
انکا نصیب بننے سے پہلے بگڑ گیا
چڑھنے لگے غدیر کے منبر پہ جب علی علیہ السلام
سارے حرامزادوں کا چہرہ اتر گیا

Magar Ghadeer Ka “Mimbar” kaha se laonge

Fazilato'n ka samandar kaha se laonge,
Bulandi ka yeh manzar kaha se laonge,
Bayan aapni badhayi ka kahi bhi karlo,
Magar Ghadeer Ka "Mimbar" kaha se laonge

فضیلتوں کا سمندر کہاں سے لاونگا،
بلندی کا یہ منظر کہاں سے لاونگا،
بیان اپنی بڑائی کا کہیں بھی کرلو،
مگر غدیر کا "منبر" کہاں سے لاونگا

Bibi Kaho Ghadeer ke Maula Ko Bhej Du

Bibi Kaho Ghadeer ke Maula Ko Bhej Du,
Ghar Me Hi Kya Haqiqate Maula Ko Bhej Du.
Binte Asad Se Koi Ye Kahta Hai Aaj Raat,
Aap Aayengi Ya Khanaye Kaaba Ko Bhej Du.

بی بی کہو غدیر کے مولا کو بھیج دوں،
گھر میں ہی کیا حقیقتِ مولا کو بھیج دوں۔
بنتِ اسد سے کوئی یہ کہتا ہے آج رات،
آپ آئیں گی یا خانہ کعبہ کو بھیج دوں

Allah ke Rasul ka farman hai Ghadeer

Allah ke Rasul ka farman hai Ghadeer
Maula Ali (as) ki shan ka eelan hai Ghadeer,
Aapne paraye logo ki pehchan hai Ghadeer,
Islam KARBALA hai to Ima'an hai Ghadeer

اللہ کے رسول کا فرمان ہے غدیر
مولا علی علیہ السلام کی شان کا اعلان ہے غدیر،
اپنے پرائے لوگوں کی پہچان ہے غدیر،
اسلام کربلا ہے تو ایمان ہے غدیر

Har Munkir e Ghadeer Ke Dil Ko Jala Dia

Munkunto Ka Nabi Ne Joh Naqma Sunadia
Har Munkir e Ghadeer Ke Dil Ko Jala Dia
Jibreel Jhoom Jhoom Ke Aamir Yeh Kehte Hain
Moula Ne Aaj Moula Ko Moula Banadiya

من کنتو کا نبی نے جو نغمہ سنا دیا
ہر منکرِ غدیر کے دل کو جلا دیا
جبریل جھوم جھوم کے عامر یہ کہتے ہیں
مولا نے آج مولا کو مولا بنا دیا

Sahabiyat Ki Hasin Shaan Bhi Ghadeer Se Hai

Sahabiyat Ki Hasin Shaan Bhi Ghadeer Se Hai,
Wiqare Buzar o Salman Bhi Ghadeer Se Hai,
Dilon Me Khoon Ka Dauraan Bhi Ghadeer Se Hai,
Khuda parasto Ki Pehchaan Bhi Ghadeer Se Hai,
Koi Nishaan Koi Khat Koi Lakeer Nahi,
Waha Pe Deen Nahi Hai Jahan Ghadeer Nahi.

صحابیت کی حسین شان بھی غدیر سے ہے،
وقار بُزر و سلمان بھی غدیر سے ہے،
دلوں میں خون کا دوران بھی غدیر سے ہے،
خدا پرستوں کی پہچان بھی غدیر سے ہے،
کوئی نشان کوئی خط کوئی لکیر نہیں،
وہاں پہ دین نہیں ہے جہاں غدیر نہیں

Abb Ye Bataao Kiska Pahla Number hai

Palaano Ka Mimber Hai,
Mimber Pe Paighamber Hai
Payghamber Ke Haato Me
Mera Maula Haider (as) Hai
Abb Ye Bataao Kiska Pahla Number hai.

پلاؤں کا منبر ہے،
منبر پہ پیغمبر ہے
پیغمبر کے ہاتھوں میں
میرا مولا حیدر علیہ السلام ہے
اب یہ بتاؤ کسکا پہلا نمبر ہے

Ghadeer e Khum me Ailaan e Wilayat e Murtaza (as) Ho Gaya

Ghadeer e Khum me Ailaan e Wilayat e Murtaza (as) Ho Gaya
Ailaan Ye Aisa Hua, Deen Muqammal Mustafa (Saw) Ka Ho Gaya
Deen e Mohammed (Saw) Akmalto ki Sanad Quraan me Paa Gaya
Haan Dekho Momino Saare Aalam Me IMAMAT o WILAYAT ka Taaj Chaa Gaya

غدیر خم میں اعلان ولایت مرتضی علیہ السلام ہو گیا
اعلان یہ ایسا ہوا، دین مکمل مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کا ہو گیا
دین محمد صلی اللہ علیہ وسلم اکملتو کی سند قرآن میں پا گیا
ہاں دیکھو مومنو سارے عالم میں امامت و ولایت کا تاج چھا گیا

Ghadeer e Khum me Ailaan e Wilayat e Murtaza (as) Ho Gaya

Mabood, Madad kar ke Aaj Mere Ashaar ka Unwaan Hai Ghadeer,
Tamam Aalemin pe Masoomeen (Slwt) ki Wilayat ka Ailaan Hai Ghadeer,
Janasheen e Risalat Ki Qul Aalemin ko Sunata Shaan Hai Ghadeer,
Haan Haqeeqatan, Haq o Baatil ke Darmiyaan ki Pehchaan Hai Ghadeer

معبود، مدد کر کے آج میرے اشعار کا عنوان ہے غدیر،
تمام عالمین پہ معصومین علیہم السلام کی ولایت کا اعلان ہے غدیر،
جانشینِ رسالت کی کل عالمین کو سناتا شان ہے غدیر،
ہاں حقیقتاً، حق و باطل کے درمیان کی پہچان ہے غدیر

Ghadeer e Khum me Ailaan e Wilayat e Murtaza (as) Ho Gaya

Mabood, Madad kar ke Aaj Mere Ashaar ka Unwaan Hai Ghadeer,
Tamam Aalemin pe Masoomeen (Slwt) ki Wilayat ka Ailaan Hai Ghadeer,
Janasheen e Risalat Ki Qul Aalemin ko Sunata Shaan Hai Ghadeer,
Haan Haqeeqatan, Haq o Baatil ke Darmiyaan ki Pehchaan Hai Ghadeer

معبود، مدد کر کے آج میرے اشعار کا عنوان ہے غدیر،
تمام عالمین پہ معصومین علیہم السلام کی ولایت کا اعلان ہے غدیر،
جانشینِ رسالت کی کل عالمین کو سناتا شان ہے غدیر،
ہاں حقیقتاً، حق و باطل کے درمیان کی پہچان ہے غدیر

Woh Do Rakat Ka Namazi Ghadeer Kya Janay

Muqam E Ishq Koi Be Zameer Kya Janay
Hussainiyat Ki Haqeeqat Haqeer Kya Janay
Nabi (S.A.W.) Ki Zaat Pe Hazyan Ka Ho Shak Jis Ko
Woh Do Rakat Ka Namazi Ghadeer Kya Janay

مقام عشق کوئی بے ضمیر کیا جانے
حسینیت کی حقیقت حقیر کیا جانے
نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی ذات پہ ہذیان کا ہو شک جس کو
وہ دو رکعت کا نمازی غدیر کیا جانے

Namaziyo’n ko bhi Eid e Ghadeer yaad rahe

Khuda parast wafaa e Ameer yaad rahe
Zamane bhar ko Nabi ka wazeer yaad rahe
Sajaya jaata hai masjid mein is liye mimbar
Namaziyo'n ko bhi Eid e Ghadeer yaad rahe

خدا پرست وفا امیر یاد رہے
زمانے بھر کو نبی کا وزیر یاد رہے
سجایا جاتا ہے مسجد میں اس لیے منبر
نمازیوں کو بھی عید غدیر یاد رہے
Share This